Tuesday, 26 February 2013

Pin It

Widgets

Barish Ki Barasti Boondon Ne بارش کی برستی بوندوں نے





بارش کی برستی بوندوں نے
جب دستک دی دروازے پر
محسوس ہوا تم آئے ہو
انداز تمھارے جیسا تھا

ہوا کے ہلکے جھونکے کی
جب آہٹ پائی کھڑکی پر
محسوس ہوا تم گزرے ہو
احساس تمھارے جیسا تھا

میں نے گرتی بوندوں کو
روکنا چاہا ہاتھوں پر
ایک سرد سا پھر احساس ہوا
وہ لمس تمھارے جیسا تھا

تنہا میں چلا پھر بارش میں
تب ایک جھونکے نے ساتھ دیا
میں سمجھا تم ہو ساتھ میرے
وہ ساتھ تمھارے جیسا تھا

پھر رک گئ وہ بارش بھی
رہی نہ باقی آھٹ بھی
میں سمجھا مجھے تم چھوڑ گئے
انداز تمھارے جیسا تھا


Barish Ki Barasti Boondon Ne
Jab Dastak Di Darwaze Par
Mehsoos Hua Tum Aaye Ho
 Andaaz Tumhare Jesa Tha ,

Hawa K Halke Jhonke Ki,
 Jab Aahat Payee Khirki Par
Mehsoos Hua Tum Guzre Ho
Ehsaas Tumhare Jesa Tha ,

Mein Ne Girti Boondon Ko
 Rokna Chaha Haathon Par
Aik Sard Sa Phir Ehsaas Howa
Wo Lums Tumhare Jesa Tha ,

Tanha Main Chali Phir Barish Me
 Tab Ek Jhonke Ne Saath Diya
Main Samjhi Tum Ho Saath Mere
 Wo Saath Tumhare Jesa Tha ,

Phir Ruk Gai Wo Barish Bhi
 Rahi Na Baqi Aahat Bhi
Main Samjh Mujhe Tum Chorr Gaye
Andaaz Tumhare Jesa Tha……




Please Do Click g+1 Button If You Liked The Post  & Share It
 

Get Free Updates in your Inbox
Follow us on:
facebook twitter gplus pinterest rss

No comments:

Post a Comment

Thanks For Nice Comments.