Sunday, 31 March 2013

Pin It

Widgets

Us Ne Jab Jab Bhi Mujhe Dil Se Pukara Mohsin

Dil Se Pukara
 

    اس نے جب جب بھی مجھے دل سے پکارا محسن
    میں نے تب تب یہ بتایا کے تمہارا محسن

    لوگ صدیوں کے خطائوں پہ بھی خوش بستے ہیں
    ہم کو لمحوں کی وفاؤں نے اجاڑا محسن

    ہو گیا جب یہ یقین اب وہ نہیں آئے گا
    آنسو اور غم نے دیا دل کو سہارا محسن

    وہ تھا جب پاس تو جینے کو بھی دل کرتا تھا
    اب تو پل بھر بھی نہیں ہوتا گزارا محسن

    اسکو پانا تو مقدر کی لکیروں میں نہیں
    اسکو کھونا بھی کریں کیسے گوارہ محسن

Us Ne Jab Jab Bhi Mujhe Dil Se Pukara Mohsin
Main Ne Tab Tab Ye Bataya K Tumhara Mohsin

Log Sadiyon Ki Khataon Pe Bhi Khush Baste Hain
Hum Ko Lamhon Ki Wafaon Ne Ujarra Mohsin

Ho Gaya Jab Ye Yaqin Ab Woh Nahi Aaye Ga
Aansoo Aur Gham Ne Diya Dil Ko Sahara Mohsin

Woh Tha Jab Pas Tou Jeenay Ko Bhi Dil Karta Tha
Ab Tou Pal Bhar Bhi Nahi Hota Guzara Mohsin

Us Ko Pana Tou Muqaddar Ki Lakeron Mein Nahi
Us Ka Khona Bhi Karien Kesey Gavara Mohsin….. 

Please Do Click g+1 Button If You Liked The Post  & Share It

Get Free Updates in your Inbox
Follow us on:
facebook twitter gplus pinterest rss

1 comment:

Thanks For Nice Comments.