Sunday, 18 June 2017

پڑوسی بھوکا ہے تین دن سے


آدھے رستے چھوڑنے والا


جانے مائیں کیوں مر جاتی ہیں


Sunday, 11 January 2015

Meri Nazrein Karein Kaisay Terey Chehray Ka Tawaaf

Best Love Poetry

میری نظریں کریں کیسے تیرے چہرے کا طواف
میری آنکھوں نے تو باندھے نہیں احرام ابھی

Saturday, 10 January 2015

Iss Dharti K Sheesh Naag Ka Dunk Barra Zehreela Hai

Urdu Sad Ghazals

اس دھرتی کے شیش ناگ کا ڈنک بڑا زہریلا ہے
 صدیاں گزریں ، آسماں کا رنگ ابھی تک نیلا ہے

 میں ہوں اپنے پیار پہ قائم اُن کی رسمیں وہ جانیں
 اور ہے ذات حسینوں کی اور میرا اور قبیلہ ہے

 میرے اُس کے ہونٹ ہلیں تو کھِلیں ہزاروں پھول مگر
 کچھ تو میں چُپ رہتا ہوں، کچھ یار مرا شرمیلا ہے

 آنسو ٹپکے ہوں گے اِن پر حرف جبھی تو پھیل گئے
 رویا ہے خط لکھنے والا، جبھی تو کاغذ گیلا ہے

 میں نے کہا دو اجنبیوں کے دل کیسے مِل جاتے ہیں
پیار سے بولی اِک دیوی یہ سب بھگوان کی لِیلا ہے

 یوں ہی تو نہیں کہتا رہتا نظمیں، غزلیں، گیت قتیلؔ
 ..یہ تو کسی کی محفل تک جانے کا ایک وسیلہ ہے