Friday, 1 February 2013

Pin It

Widgets

Gham Nahi Bhoolta Bhulane Se غم نہیں بھولتا بہلانے سے


غم نہیں بھولتا بہلانے سے
نم ہوئی آنکھ مسکرانے سے

آج وہ اجنبی سے لگتے ہیں
جانتا ہوں جنہیں زمانے سے

دوستوں کی پرکھ نہیں کرنا
مان ٹوٹتے ہیں آزمانے سے

جب سے اپنوں سے چوٹ کھائی ہے
کوئی شکوہ نہیں زمانے سے

زندگی کی حقیقتوں کی قسم
دل کی باتیں ہیں بس فسانے سے...

Gham Nahi Bhoolta Bhulane Se
Num Hui Aankh Muskurane Se

Aaj Woh Ajnabi Se Lagte Hain
Janta Hon Jinehe Zamanay Se

Doston Ki Parakh Nahi Karna
Mann Toote Gaa Aazmane Se

Jab Se Apno Se Chot Khai Hai
Koi Shikwah Nahi Zamane Se

Zindagi Ki Haqiqaton Ki Qasam
Dil Ki Batein Hain Bas Fasane Se..


Please Do Click g+1 Button If You Liked The Post & Share It


Get Free Updates in your Inbox
Follow us on:
facebook twitter gplus pinterest rss

No comments:

Post a Comment

Thanks For Nice Comments.