Wednesday, 20 February 2013

Pin It

Widgets

Gul Tera Rang Chura Laye گُل ترا رنگ چرا لائے ہیں


Jal Raha Hoon

گُل ترا رنگ چرا لائے ہیں گلزاروں میں
جل رہا ہوں بھری برسات کی بوچھاروں میں

مجھ سے کترا کے نکل جا مگر اے جانِ جہاں!
دل کی لَو دیکھ رہا ہوں ترے رخساروں میں

مجھ کو نفرت سے نہیں پیار سے مصلوب کرو
میں بھی شامل ہوں محبت کے گنہ گاروں میں

حُسن بیگانۂ احساسِ جمال اچھا ہے
غنچے کھِلتے ہیں تو بِک جاتے ہیں بازاروں میں

ذکر کرتے ہیں ترا مجھ سے بعنوانِ جفا
چارہ گر پھول پرو لائے ہیں تلواروں میں

میرے کِیسے میں تو اک سُوت کی انٹی بھی نہ تھی
نام لکھوا دیا یوسف کے خریداروں میں

رُت بدلتی ہے تو معیار بدل جاتے ہیں
بلبلیں خار لیے پھرتی ہیں منقاروں میں

زخم چھپ سکتے ہیں لیکن مجھے فن کی سوگند
غم کی دولت بھی ہے شامل میرے شاھکاروں میں

چُن لے بازارِ ہنر سے کوئی بہروپ ندیمؔ
اب تو فنکار بھی شامل ہیں اداکاروں میں



Gul Tera  Rang Chura Laye Hain Gulzaron  Main
Jal  Raha Hoon Bhari Barasaat Ki Boocharon Main

Mujh Se Katra K Nikal Ja Magar Ai Jan-e-Jahan
Dil Ki Lou Dekh Raha Hoon Tere Rukhsaron Main

Mujh Ko Nafrat Se Nahin Piyar Se Masloob Karo
Main Bhi Shamil Hoon Mohabbat K Gunehgaron Main

Husn-e-Begana-e-Ehasas-e-Jamal Acha Hai
Gunchey Khilte Hain Tou Bik Jate Hain Bazaron Main

Zikr Karte Hain Tera Mujh Se Ba’unavan-e-Jafa
Charagar Phool Piro Laye Hain Talvaron Main

Mere Keesay Men Tou Ik Soot Ki Unti Bhi Na Thi
Naam Likhwa Diya Yousuf K Kharidaaron Men

Rut Badalti Hay Tou Mayaar Badal Jatay Hen
Bulbulen Khaar Liye Phirti Hen Manqaaron Men

Zakhm Chup Sakate Hain Lekin Mujhe Fun Ki Sougandh
Gham Ki Dolat Bhi Hai Shamil Mere Shahakaron Main

Chun Lay Bazar-e-Hunar Say Koi Behroop Nadeem
Ab Tou Fankaar Bhi Shamil Hen Adakaaron Men........



Please Do Click g+1 Button If You Liked The Post  & Share It


Get Free Updates in your Inbox
Follow us on:
facebook twitter gplus pinterest rss

1 comment:

Thanks For Nice Comments.