Tuesday, 19 February 2013

Pin It

Widgets

Zindagi Yun Thi K زندگی یُوں تھی کہ جینے کا بہانہ تُو تھا



Bahana Tu Tha

زندگی یُوں تھی کہ جینے کا بہانہ تُو تھا
ہم فقط زیبِ حکایت تھے، فسانہ تُو تھا

ہم نے جس جس کو بھی چاہا تیرے ہجراں میں، وہ لوگ
آتے جاتے ہوئے موسم تھے، زمانہ تُو تھا

اب کے کچھ دل ہی نہ مانا کہ پلٹ کر آتے
ورنہ ہم دربدروں کا ٹھکانہ تُو تھا

یار و اغیار کے ہاتھوں میں کمانیں تھیں فرازؔ
اور سب دیکھ رہے تھے، کہ نشانہ تُو تھا



Zindagi Yun Thi K Jeene Ka Bahana “ TU ” Tha
Hum Faqat Zaib-e-Hikayat Thay Fasana “ TU ” Tha

Hum Ne Jis Jis Ko Bhi Chaha Tere Hijraan Mein Wo Log
Aaatey Jaatey Huey Mosam Thay Zamana “ TU ”  Tha

Ab K Kuch Dil Hi Na Maana K Palat Kar Aatey
Warna Hum Dar Badaron Ka Thikana “ TU ” Tha

Yaar-o-Aaghyaar K Haathon Mein Kamaaney Thi FARAZ
Aur Sab Dekh Rahey Thay K ,  Nishaana “ TU ”  Tha...




Please Do Click g+1 Button If You Liked The Post  & Share It


 
Get Free Updates in your Inbox
Follow us on:
facebook twitter gplus pinterest rss

No comments:

Post a Comment

Thanks For Nice Comments.