Sunday, 17 March 2013

Pin It

Widgets

Umr Ki Sari Thakan Laad K Ghar Jata Hoon..


Ghar Jata Hoon

عمر کی ساری تھکن لاد کے گھر جاتا ہوں
رات بستر پہ میں سوتا نہیں مر جاتا ہوں

میں نے جو اپنے خلاف آج گواہی دی ہے
وہ ترے حق میں نہیں ہے تو مکر جاتا وں

اکثر اوقات۔۔۔ ۔ بھرے شہر کے سناٹے میں
اس قدر زور سے ہنستا ہوں کہ ڈر جاتا ہوں

میرے آنے کی خبر صرف دیا رکھتا ہے
میں ہواؤں کی طرح آ کے گزر جاتا ہوں

دل ٹھہر جاتا ہے بھولی ہوئی منزل میں کہیں
میں کسی دوسرے رستے سے گذر جاتا ہوں

سمٹا رہتا ہوں بہت حلقہء احباب میں،مَیں
چار دیواری میں آتے ہی بکھر جاتا ہوں


Umr Ki Sari Thakan Laad K Ghar Jata Hoon
Raat Bistar Pe Men Sota Nahi Mar Jata Hoon

Men Ne Jo Apne Khilaaf  Aaj Gawahe Di Hai
Woh Tere Haq Men Nahi Hay Tou Mukar Jata Hoon

Aksar Oqaat Bharey Shehar K Sannatey Men
Is Qadae Zor Se Hansta Hoon K Dar Jata Hoon

Mere Aane Ki Khabar Sirf  Diya Rakhta Hay
Men Hawaon Ki Tarha Aa K Guzar Jata Hoon

Dil Thehar Jata Hai Bholi Hui Manzil Men Kaheen
Men Kisi Dosre Rastey Say Guzar Jata Hoon

Simta Rehta Hoon Bohat Halq-e-Ehbaab Men, Mein
Chaar Diwari Men Aaty He Bikhar Jata Hoon…….




Please Do Click g+1 Button If You Liked The Post  & Share It

Get Free Updates in your Inbox
Follow us on:
facebook twitter gplus pinterest rss

4 comments:

  1. Buht achi shairi hai. thanks for sharing..


    Best Regards
    Download Your Favoirte Urdu Romantic Novel in PDF Format http://urdu24.blogspot.com

    ReplyDelete
  2. bohat umda Shayari Hay,,keep Posting Nice poetry

    ReplyDelete
  3. Bohat Sad Collection Hai Apki

    ReplyDelete

Thanks For Nice Comments.