Sunday, 28 April 2013

Pin It

Widgets

Khushboun Ki Barish Thi, Chaandni Ka Pehra Tha

Teri Jheel Aankhon


خوشبوؤں کی بارش تھی، چاندنی کا پہرہ تھا
میں بھی اُس شبستاں میں ایک رات ٹھہرا تھا

تو مری مسیحائی جان! کس طرح کرتا
تیری جھیل آنکھوںسے میرا زخم گہرا تھا

میں نے اس زمانے میں تیرے گیت گائے ہیں
تیرا نام لینا بھی جب گناہ ٹھہرا تھا

اس گھڑی نبھایا تھا اس نے وصل کا وعدہ
جب تمام رستوں پر چاندنی کا پہرہ تھا

رنگ یاد ہے اس کا شام کے دھندلکے میں
آنسوؤں سے تر چہرہ کس قدر سنہرا تھا
Khushboun Ki Baarish Thi, Chaandni Ka Pehra Tha
Mein Bhi Us Shabistaan Mein, Aik Raat Thehra Tha

Tu Meri Masihaaie Jan , Kis Tarha Karta
Teri Jheel Aankhon Se, Mera Zakhm Gehra Tha

Mein Ne Us Zamane Mein , Tere Geet Gaey Thay
Tera Naam Lena Bhi, Jab Gunah Thehra Tha

Us Gharri Nibhaya Tha , Usne Visl Ka Wada
Jab Tamaam Raston Par Chaandni Ka Pehra Tha

Rung Yaad Hai Uska, Shaam K Dhundalkay Mein
Aansoun Se Tar Chehra, Kis Qadar Sunehra Tha....



 Please Do Click g+1 Button If You Liked The Post  & Share It

Get Free Updates in your Inbox
Follow us on:
facebook twitter gplus pinterest rss

No comments:

Post a Comment

Thanks For Nice Comments.