Sunday, 5 May 2013

Pin It

Widgets

Agar Mil Sakey Tou Wafa Chaheye

Duaa Urdu Poetry



اگر مل سکے تو وفا چاہیے
ہمیں کچھ نہ اس کے سِوا چاہیے

بہت بے سکوں ہے وہ میرے بِنا
اُسے زندگی کی دُعا چاہیے

کہیں بھی میں جاؤں پلٹ آؤں گی
مجھے بس تری اک صدا چاہیے

ہو تکمیل جس سے مری ذات کی
بہاروں کی ایسی نوا چاہیے

مجھے تیرے قدموں میں اے ہم نوا
اگر مل سکے تو جگہ چاہیے

کہاں تک بھلا میں نبھاؤں وفا
کبھی تو مجھے بھی صلہ چاہیے

سمندر سمندر مری زندگی
کنارا مجھے اے خدا چاہیے

پلٹنے کا مجھ میں نہیں حوصلہ
ترے در پہ ہی اب قضا چاہیے


  

Agar Mil Sakey Tou Wafa Chaheye
Hame Kuch Na Is K Siwa Chaheye

Bohat Be-Sukoon Hai, Woh Mere Bina
Usay Zindagi Ki Duaa Chaheye

Kaheen Bhi Mein Jaon, Palat Aaon Gi
Mujhe Bus Teri Ik Sada Chaheye

Ho Takmeel Jis Se, Meri Zaat Ki
Baharon Ki Aisi Nawa Chaheye

Mujhe Tere Qadmon Mein , Ay Hum-Nawa
Agar Mil Sakay Tou, Jaga Chaheye

Kahan Tak Bhala Mein, Nibhaon Wafa
Kabhi Tou Mujhe Bhi Sila Chaheye

Samandar Samandar, Meri Zindagi
Kinara Mujhe Ay Khuda Chaheye

Palatne Ka Mujh Mein , Nahi Hosla
Tere Dar Pe He Ab, Qaza Chaheye....



 Please Do Click g+1 Button If You Liked The Post  & Share It


Get Free Updates in your Inbox
Follow us on:
facebook twitter gplus pinterest rss

No comments:

Post a Comment

Thanks For Nice Comments.