Thursday, 6 June 2013

Pin It

Widgets

Taveel Karb-o-Masa'ib Ka Baab Kitna Hai,,,,

Azaab Kitna Hai

طویل کرب و مصائب کا باب کتنا ہے
بتا نصیب میں میرے عذاب کتنا ہے

اندھیری رات میں نکل کے دیکھ کبھی
پتہ  چلے  گا  زمانہ  خراب  کتنا  ہے

میں جانتا ہوں حقیقت کسی کو کیا معلوم
فضائے دل میں مری اضطراب کتنا ہے

ہمارے ضعف پہ مت جاؤ فکر کو دیکھو
کہ اس میں حسن ہے کتنا ، شباب کتنا ہے

کیا ہے قصد کہ بےباق کر ہی ڈالیں گے
ذرا  بتاؤ  ہمارا  حساب  کتنا  ہے

زمینِ دل کو مری یہ بھگو نہیں سکتا
پتہ ہے تیرے کرم کا سحاب کتنا ہے

ہمیشہ جود و کرم کا عمل رہا جاری
کبھی نہ سوچا کہ اس میں ثواب کتنا ہے

ازل سے پڑھتے رہے ہیں کتاب عشق مگر
پتہ نہیں ہے باقی نصاب کتنا ہے

بہت قریب سے پرکھا جو اس کو شیدائی
...ہوا  ہے  علم  وہ  عزت  مآب  کتنا  ہے

Taveel Karb-o-Masa’ib Ka Baab Kitna Hai
Bata Naseeb Mein Mere Azaab Kitna Hai

Andheri Raat Mein Nikal K Dekh Kabhi
Pata Chalay Ga Zamana Kharab Kitna Hai

Mein Janta Hoon Haqiqat Kisi Ko Kia Maloom
Fiza-e-Dil Mein Meri Iztaraab Kitna Hai

Hamare Zo’af Pay Mat Jao Fikar Ko Dekho
K is Mein Husn Hai Kitna , Shabaab Kitna Hai

Kia hai Qasd K Be-Baak Kar He Daalein Gay
Zara Batao Hamara Hisaab Kitna Hai

Zameen-e-Dil Ko Meri Yeh Bhigo Nahi Sakta
Pata Hai Tere Karam Ka Sahaab Kitna Hai

Hamesha Jod-o-Karam Ka Amal Raha Jaari
Kabhi Na Socha K Is Mein Sawaab Kitna Hai

Azal Se Parhte Rahe Hein Kitab-e-Ishq Magar
Pata Nahi Hai, Baqi Nisaab Kitna Hai

Bohat Qareeb Se Jo Parkha Usko Sheedaie
Huwa Hai Ilm Woh Izzat Muaab Kitna Hai,,..


Please Do Click g+1 Button If You Liked The Post  & Share It

Get Free Updates in your Inbox
Follow us on:
facebook twitter gplus pinterest rss

No comments:

Post a Comment

Thanks For Nice Comments.