Saturday, 20 July 2013

Pin It

Widgets

Zindagi Dar K Nahi Hoti Basar , Janey Do


Phir Chalay Aaey Ho

زندگی ڈر کے نہیں ہوتی بسر، جانے دو
جو گزرنی ہے قیامت وہ گزر جانے دو

دیکھتے جانا بدل جائے گا منظر سارا
یہ دھواں سا تو ذرا نیچے اُتر جانے دو

پھر چلے آئے ہو تم میری مسیحائی کو
پہلے کچھ رِستے ہوئے زخم تو بھر جانے دو

ایک خوشبو کی طرح زندہ رہو دنیا میں
اور پھر کیا ہے اگر خود کو بکھر جانے دو

آرزو اپنی بدل ڈالو خدا کی خاطر
ان کی دہلیز پہ پھوڑو نہ یہ سر، جانے دو

دلِ ناداں ! تو سمجھتا ہی نہیں دنیا کو
کون رکھتا ہے بھلا کس کی خبر، جانے دو

سعد ! تم عیب نکالو نہ ہمارے ایسے
ہم بھی رکھتے ہیں گلے شکوے، مگر جانے دو
Zindagi Dar K Nahi Hoti Basar , Janey Do
Jo Guzarti Hai QayamAt Woh Guzar, Janey Do

Dekhtay Jana Badal Jaega Manzar Sara
Yeh Dhuwaan Sa Tou Zara Neechay Utar, Janey Do

Phir Chalay Aey Ho Tum Meri Masihaaie Ko
Pehle Kuch Rastay Huey Zakhm Tou Bhar, Janey Do

Aik Khushbu Ki Tarha Zinda Raho Dunya Mein
Aur Phir Kia Hai Agar Khud Ko Bikhar, Janey Do

Aarzoo Apni Badal Dalo Khuda Ki Khatir
Inki Dehleez pay Phorro Na Yeh Sar, Janey Do

Dil-e-Nadaan Tu Samjhta He Nahi Dunya Ko
Kon Rakhta Hai Bhala Kis Ki Khabar, Janey Do

Saad Tum Aib Nikalo Na Hamare Aisay
Hum Bhi Rakhte Hein Gilay Shikway Magar, Jane Do. .. ..



Please Do Click g+1 Button If You Liked The Post  & Share It

Get Free Updates in your Inbox
Follow us on:
facebook twitter gplus pinterest rss

1 comment:

Thanks For Nice Comments.