Thursday, 10 October 2013

Pin It

Widgets

Bus Aik Shakhs He Kull Ka'enaat Ho Jaisy .. ..





 بس اِک شخص ہی کُل کائنات ہو جیسے
 نظر نہ آۓ تو دن میں بھی رات ہو جیسے

 میرے لبوں پہ تبسم  معجزن ہے اب تک
 کہ  دل  کا  ٹوٹنا سی بات ہو جیسے

 شبِ فراق مجھےآج یوں  ڈراتی ہے
 تیرے بغیر میری پہلی رات ہو جیسے

 اُس کی یاد کی یہ بھی ایک کرامت ہے
 ہزار میل پہ ہو کہ بھی ساتھ ہو جیسے

  تیرا سلوک مجھے روز زخم تازە دے
 کسی کو پہلی محبت میں مات ہو جیسے

ہمارے  دل  کو  کوئ  مانگنے نہ آیا عدم
 .. .. کسی "غریب" کی بیٹی کا ہاتھ ہو جیسے
  
Bus Aik Shakhs He Kull Ka'enaat Ho Jaisy
Nazar Na Aaye Tou Din Men Bhi Raat Ho Jaisy

Mery Labon Pay Tabassum Hai Mojzan Ab Tak
K Dil Ka Tootna Chhoti Si Baat Ho Jaisy

Shab-E-Firaaq Mujhay Aaj Youn Daraati Hai
Tere Baghair Meri Pehli Raat Ho Jaisy

Ussi Ki Yaad Ki Yeh Bhi Tou Ik Karamat Hai
Hazaar Meel Pay Ho Kar Bhi Saath Ho Jaisy

Tera Sulook Mujhay Roz Zakhm Taaza Day
Kisi Ko Pehli Mohabbat Main Maat Ho Jaisy

Hamare Dil Ko Koi Maa'ngnay Na Aaya Adam
Kisi Ghareeb Ki Beti Ka Hath Ho Jaisy .. .. ...


Please Do Click g+1 Button If You Liked The Post  & Share It

Get Free Updates in your Inbox
Follow us on:
facebook twitter gplus pinterest rss

No comments:

Post a Comment

Thanks For Nice Comments.