Friday, 1 November 2013

Pin It

Widgets

Zakhm Yaado'n K Nahi Mit'tay Hein Aasani Se .....

Yeh Kis Ka

    زخم یادوں کے نہیں مٹتے ہیں آسانی سے
    داغ دھلتے ہیں کہاں بہتے ہوئے پانی سے

    دیکھتی جاتی ہوں میلے کا تماشہ چپ چاپ
    کیا  پتہ بول  پڑے  آنکھ  ہی ویرانی  سے

    روشنی کا یہ خزانہ مری آنکھیں ہی نہ ہوں
    شمع تو میں نے بجھادی ہے پریشانی سے

    میرےچہرے میں جھلکتا ہے کسی اور کا عکس
    آئنہ  دیکھ  رہا  ہے مجھے  حیرانی  سے

    باندھ  لی میں نے دعا رخت سفر میں  نیناں
   ... ... ڈر جو لگتا ہے مجھے بے سرو سامانی سے​


Zakhm Yaado'n K Nahi Mit'tay Hein Aasani Say
Daag Dhultey Hein Kahan Behtay Huey Pani Say

Dekhti Jati Hoon Melay Ka Tamasha Chup Chaap
Kia Pata Bol Parray Aankh He Veerani Say

Roshni Ka Yeh Khazana Meri Aankhen He Na Hon
Shamma Tou Mein Ne Bujha Dil Hai Pareshani Say

Mere Chehray Mein Jhalakta Hai Kisi Aur Ka Aks
Aaiena Daikh Raha Hai Mujhe Hairani Say

Baandh Li Mein Ne Dua Rakht-e-Safar Mein Naina'n
Dar Jo Lagta Hai Mujhe Be-Sar-o-Saamani Say... ....

Please Do Click g+1 Button If You Liked The Post  & Share It

Get Free Updates in your Inbox
Follow us on:
facebook twitter gplus pinterest rss

No comments:

Post a Comment

Thanks For Nice Comments.