Monday, 12 May 2014

Pin It

Widgets

Chehrey Pe Gard Lab Pe Hai Talaa Parra Hua

Sahib Poetry Collection 

چہرے پہ گَرد, لب پہ ہے تالا پڑا ہُوا
کس کامنی سےدل کو ہے پالا پڑا ہُوا

اُس مَدھ مَکھی کےانگ سُنَہرے,سفیدرنگ
صندل  کے جنگلوں  میں  اجالا  پڑا  ہُوا

دن بچپنے کےآئیں نہ ہم تم وہاں نہائیں
ویراں  ہے اُس نگ رکا وہ  نالا  پڑا ہُوا

بیٹی شَہہ ِعرب کی نہیں تو رسَن میں قید
تاریخ  کے گلے میں  ہے ہالہ  پڑا ہُوا

سُورج نےآکےنورکےاَمرت سےبھردیا
تالاب  پر کنول  کا  پیالہ  پڑا  ہُوا

آ دیکھ ان نچَنت گڈَریوں کےدیس میں
ندّی  پر ایک  بانسری  والا  پڑا  ہُوا

لوبان کی مہک ہےنہ پازیب کی چھنک
مدّت سے بند ہے وہ  شوالا  پڑا ہُوا

جگ جگ سےتیری موہ کی متواری آگ میں
جل جل  کے میرا رنگ  ہے کالا  پڑا  ہُوا

بتلائے ساری بات , بتائی کہاں پہ رات
کاندھے پہ اُس کے پی کا دُوشالا پڑا ہُوا

وہ دیکھ تیرے واسطے شاخِ چنار پر
 ...پہلی کا چاند بن کے ہے مالا  پڑا  ہُوا


Chehrey Pe Gard Lab Pe Hai Talaa Parra Hua
Kis Kaamni Se Dil Ko Hai Pala Parra Hua

Us Madh Makhi K Ang Sunehre, Sufaid Rung
Sandal K Jungalo'n Mein Ujala Parra Hua

Din Bachpaney K Aaen Na, Hum Tum Wahan Nahaie'n
Veeraa'n Hai Us Nagar Ka Woh Nala Parra Hua

Beti Shah-e-Arab Ki Nahi Tou Rasan Mein Qaid
Tareekh K Galay Mein Hai Hala Parra Hua

Sooraj Ne Aa K Noor K Amrat Se Bhar Diya
Talaab Pe Kanwal Ka Piyala Parra Hua

Aa Daikh In Nuchnat Gudaryon K Shehar Mein
Naddi Par Aik Baansuri Wala Parra Hua

Lohaan Ki Mehak Hai Na Paazaib Ki Chhanak
Muddat Se Band Hai Woh Shawala Parra Hua

Jug Jug Se Teri Mooh Ki Matwaari Aag Mein
Jal Jal K Mera Rung Hai Kala Parra Hua

Batlaey Sari Baat , Bitaaie Kahan Pe Raat
Kaandhey Pe Us K Pee Ka Dou-Shala Parra Hua

Woh Daikh Tere Wastey Shakh-e-Chanaar Par
Pehli Ka Chaand Ban K Hai Mala Parra Hua.... 

 Please Do Click g+1 Button If You Liked The Post  & Share It

Get Free Updates in your Inbox
Follow us on:
facebook twitter gplus pinterest rss

No comments:

Post a Comment

Thanks For Nice Comments.