Wednesday, 25 June 2014

Pin It

Widgets

Youn Chaak Kiya Hum Ne Geraibaan Wagaira

Ap K Honton

ہے آپ کے ہونٹوں پہ جو مسکان وغيرہ
قربان گئے اس پہ دل و جان وغيرہ

بلي تو يونہي مفت ميں بدنام ہوئي ہے
تھيلے ميں تو کچھ اور تھا سامان وغيرہ

بے حرص و غرض فرض ادا کيجيے اپنا
جس طرح پوليس کرتي ہے چالان وغيرہ

اب ہوش نہيں کوئي کہ بادام کہاں ہے
اب اپني ہتھيلي پہ ہيں دندان وغيرہ

کس ناز سے وہ نظم کو کہہ ديتے ہيں نثري
جب اس کے خطا ہوتے ہيں اوزان وغيرہ

جمہوريت اک طرز حکومت ہے کہ جس ميں
گھوڑوں کي طرح بکتے ہيں انسان وغيرہ

ہر شرٹ کي بشرٹ بنا ڈالي ہے انورؔ
 ... يوں چاک کيا ہم نے گريبان وغيرہ


Hai Ap K Honton Pay Jo Muskaan Wagaira
Qurban Gaey Us Pay Dil-O-Jaan Wagaira

Billi Tou Youn He Muft Mein Badnaam Hui Hai
Thailey Mein Tou Kuch Aur Tha Samaan Wagaira

Be-Hars-O-Garz Farz Adaa Kijiye Apna
Jis Tarha Police Karti Hai Chalaan Wagaira

Ab Hosh Nahi Koi K Badaam Kahan Hai
Ab Apni Hatheli Pay Hai Dandaan Wagaira

Kis Naaz Se Woh Nazam Ko Keh Daitey Hein Nasri
Jab Us K Khata Hotey Hai Owsaan Wagaira

Jamhoriyat Ik Tarz-E-Hukoomat Hai K Jis Mein
Ghorron Ki Tarha Biktey Hein Insaan Wagaira

Har Shirt Ki Ba-Shirt Bana Daali Hai Anwar
Youn Chaak Kiya Hum Ne Geraibaan Wagaira ...

 Please Do Click g+1 Button If You Liked The Post  & Share It
Get Free Updates in your Inbox
Follow us on:
facebook twitter gplus pinterest rss

No comments:

Post a Comment

Thanks For Nice Comments.