Sunday, 9 November 2014

Pin It

Widgets

Khushboo Ki Tarha Dil K Gulaabo Mein Rahey Ga

Best Love Ghazals

خوشبو کی طرح دل کے گلابوں میں رہے گا
وہ چاند ہمیشہ میرے خوابوں میں رہے گا

بھیگی ہوئی آنکھوں سے گلے مل کے بچھڑنا
وہ شخص سدا دل کے نصابوں میں رہے گا

شاید میں ابھی اس کے جگر تک نہیں اترا
شاید وہ ابھی اور نقابوں میں رہے گا

سانسوں کی طرح میں، تیری نس نس میں رہوں گا
کھو کر تُو مجھے خود بھی عذابوں میں رہے گا

نشہء تو تیرے قرب کا ہے جانِ تمنا
کیا لطف تیرے بعد شرابوں میں رہے گا

ہاں پیار ہے، ہاں پیار ہے، سولی پہ چڑھا دو
اقرار ہے، اقرار ہے، جوابوں میں رہے گا

پھر زرد رُتیں دل پہ اُترنے لگیں ایاز
 ...دل تب ہی بچے گا جو خرابوں میں رہے گا

Khushboo Ki Tarha Dil K Gulaabo Mein Rahey Ga
Woh Chaand Hamesha Merey Khuwabon Mein Rahey Ga

Bheegi Hui Aankhon Se Galay Mil K Bichharrna 
Woh Shakhs Sada Dil K Nisabo'n Mein Rahey Ga

Shayad Mein Abhi Us K Jigar Tak Nahi Utra
Shayad Woh Abhi Aur Naqaabo'n Mein Rahey Ga

Saanson Ki Tarha, Teri Nuss Nuss Mein Rahon Ga
Kho Kar Tu Mujhe Khud Bhi Azaabo'n Mein Rahey Ga

Nasha Tou Terey Qurb Ka Hai Jan-E-Tamanna
Kia Lutf Terey Baad Sharabo'n Mein Rahey Ga

Haan Piyar Hai, Haan Piyar Hai, Sooli Pay Charrhado
Iqrar Hai, Iqrar Hai, Jawabo'n Mein Rahey Ga

Phir Zard Rutein Dil Pay Utarney Lagi Ayaaz
Dil Tab He Bachay Ga Jo Kharabo'n Mein Rahey Ga...

Please Do Click g+1 Button If You Liked The Post  & Share It
Get Free Updates in your Inbox
Follow us on:
facebook twitter gplus pinterest rss

5 comments:

  1. Awesome

    پھر زرد رُتیں دل پہ اُترنے لگیں ایاز
    ...دل تب ہی بچے گا جو خرابوں میں رہے گا

    ReplyDelete

Thanks For Nice Comments.