Tuesday, 16 December 2014

Pin It

Widgets

Majboor Thay Hum Uss Se Mohabbat Bhi Bohat Thi

Best Love Poetry
  
ظالم تھا وہ اور ظلم کی عادت بھی بہت تھی
مجبور تھے ہم اس سے محبت بھی بہت تھی

اس بُت کے ستم سہ کے دکھا ہی دیا ہم نے
گو اپنی طبیعت میں بغاوت بھی بہت تھی

واقف ہی نا تھا رمز محبت سے وہ ورنہ
دل کے لیے تھوڑی سی عنایت بھی بہت تھی

یوں ہی نہیں مشہور زمانہ میرا قاتل
اس شخص کو اس فن میں مہارت بھی بہت تھی

ہر شام سناتے تھے حسینوں کو غزل ہم
جب مال بہت تھا تو سخاوت بھی بہت تھی


Zalim Tha Woh Aur Zulm Ki Aadat Bhi Bohat Thi
Majboor Thay Hum Uss Se Mohabbat Bhi Bohat Thi

Uss Butt K Sitam Seh K Dikha He Diya Hum Ne
Go Apni Tabiyat Mein Bagawat Bhi Bohat Thi

Waqif He Na Tha Ramz-E-Mohabbat Se Woh Warna
Dil K Liye Thorri Si Inayat Bhi Bohat Thi

Youn He Nahi Mash-Hoor Zamana Mera Qaatil
Uss Shakhs Ko Iss Fun Mein Maharat Bhi Bohat Thi

Har Shaam Sunatey Thay Haseeno Ko Ghazal Hum
Jan Maal Bohat Tha Tou Sakhawat Bhi Bohat Thi



Please Do Click g+1 Button If You Liked The Post  & Share It

Get Free Updates in your Inbox
Follow us on:
facebook twitter gplus pinterest rss

5 comments:

Thanks For Nice Comments.