Thursday, 8 January 2015

Pin It

Widgets

Bata Diya Hai Tujhey Yeh Samaa Nahi Hona

Great Ghazal Collection

 بتا دیا ہے تجھے ' یہ سماں نہیں ہونا
نظر ہٹائی تو ہم نے یہاں نہیں ہونا

تجھے سمَجھنا پڑے گا بہاو کا مسلک
جو آب شار ہے اس نے کنواؑں نہیں ہونا

مجھے سراب کِیا ہے تو کر نظارہ مِرا
کہ ایسی رَیت نے پھر یوں رواں نہیں ہونا

اسی یقین میں ہر ایک ہو گیا معدوم
کہ میں نہیں ہوں وہ ، جس کا نشاں نہیں ہونا

ہم اپنی تَہہ میں بھڑکتے ہوئے سمَجھتے ہیں
کہ اِس الاو نے شاید دھواؑں نہیں ہونا

میں اپنی قدر سے آگاہ صِفر ہوں تیرا
 ... مجھے بس اتنا بتا دے ، کہاں نہیں ہونا
 
Bata Diya Hai Tujhey ' Yeh Samaan Nahi Hona
Nazar Hataiee Tou Hum Ne Yahan Nahi Hona

Tujhey Samajhna Parrey Ga Bahaao Ka Muslak
Jo Aabshaar Hai USS Ne Kunwaan Nahi Hona

Mujhe Saraab Kia Hai Tou Kar Nazara'h Mera
Ke'h Aisi Rait Ne Phir Youn Rawaan Nahi Hona

Issi Yaqeen Mein Har Aik Hogaya Ma'adoom
Ke'h Mein Nahi Hoon Woh ,Jiska Nishaan Nahi Hona

Hum Apni Teh Mein Bharrakte Hue Samajhte Hein
Ke'h Iss Alaao Ne Shayad Dhuwaan Nahi Hona

Mein Apni Qadar Se Aagha'h Sifar Hoon Tera
Mujhey Bus Itna Bata Dey Kahan Nahi Hona ...

Please Do Click g+1 Button If You Liked The Post  & Share It
Get Free Updates in your Inbox
Follow us on:
facebook twitter gplus pinterest rss

3 comments:

Thanks For Nice Comments.